Breaking News
Home / بین الاقوامی / بین الاقوامی کالمز / شاطر مجرمان اور گوجرانوالہ پولیس کا شکنجہ

شاطر مجرمان اور گوجرانوالہ پولیس کا شکنجہ

دوستو انسان کی فطرت میں خیر اور شر شائد اس لیے ہے کہ شیطان اس کا سریع دشمن ہے اور ہر انسان کی حیات میں شیطان ہمیشہ اس کے ساتھ ہے جبکہ اللہ پاک بھی سورت ملک میں فرماتے ہیں کہ تمام جہانوں کا بادشاہ تو صرف اللہ ہے اور وہ ہر چیز پر قادر ہے اور پھر یہ کہ اللہ تعالیٰ نے موت اور زندگی اسی لیے پیدا کی کہ وہ آزمائے کہ عملوں میں کون اچھا ہے۔ شائد اسی لیے علامہ اقبال صاحب فرماتے ہیں کہیہی آئین ِ قدرت ہے یہی اسلوب فطرت ہے ۔جو ہے راہِ عمل میں گامزن محبوب ِفطرت ہے۔اپنی دنیا آپ پیدا کر اگر زندوں میں ہے۔ راہِ عمل پر گامزن سٹی پولیس آفیسر ڈاکٹر معین  مسعود نے بھی اسی بابت اپنا لوہا منوایا ہے اور وہ ضلع گوجرانوالہ کو امن کا گہوارہ بنانے میں دن رات جُٹے ہوئے ہیں ۔ پچھے ہفتہ میں ڈاکووں اور چوروں کو نشانِ عبرت بناتے ہوئے اُن سے ساڑھے چار کروڑ کے قریب ریکوری کرکے معززین اور پیارے بھائی صحافیوں کی موجوگی میں لوٹا ہوا مال اصل مالکان کے حوالے کیا گیا۔انسدادِ کرائم اور گوجرانوالہ کو امن کا گہوارہ بنانے کے لیے سٹی پولیس آفیسرڈاکٹر معین مسعود نے ڈویژنل ایس پیز اور دبنگ ڈی ایس پی سی آئی اے عمران عباس چدھڑ کو خصوصی احکامات جاری کئے ہوئے ہیں اور یہ بات زبان زدِ عام ہے کہ انسدادِ کرائم میں شاندار کارروائی کرتے ہوئے عمران عباس چدھڑ نے ریکارڈ قائم کر رکھا ہے۔دوستو میں تو یہاں یہ بات کہنے میں اپنے آپ کو حق بجانب سمجھتا ہوں کہ ڈی ایس پی سی آئی ا ے عمران عباس چدھڑ نظر عمیق رکھتے ہیں۔ اگر درندہ صفت لوگ اپنی درندگی میں بڑے تیز ہیں تو عمران عباس چدھڑ اور اُن کی ٹیم کو بھی اللہ پاک نے بڑی مہارت اور سمجھ بوجھ دے رکھی ہے۔ دوستو حال ہی میں دو بڑے دلچسپ وقوعہ جات کی بات گوش گوار کرنا چاہتا ہوں۔سٹی پولیس آفیسر ڈاکٹر معین مسعود نے موٹر سائیکل چوری کی وارداتوں کا سخت نوٹس لیتے ہوئے ضلع بھر میں انسداد جرائم کے لئے پولیس ٹیمیں تشکیل دے رکھی ہیں ۔ سی آئی اے پولیس نے بھی سی پی او کی ہدایت پر موٹر سائیکل چور گروہوں کے خلاف وسیع پیمانے پر کریک ڈاؤن کا آغاز کر تے ہوئے متعدد ٹیمیں تشکیل دے رکھی ہیں ۔دبنگ ڈی ایس پی سی آئی اے عمران عباس چدھڑ کی زیر نگرانی کام کرنے والی پولیس ٹیم نے نہایت پیشہ وارانہ مہارت اور سائنٹیفک انداز سے کارروائی عمل میں لاتے ہوئے آصف گجراتی موٹر سائیکل چور گینگ کے02اراکین کو گرفتار کرکے دوران تفتیش ان کے قبضہ سے دو لاکھ اسی ہزار روپے نقدی،ایک موٹر سائیکل ہنڈا125 اور ماسٹر کیز و دیگر آلات برآمد کر لیے ۔گرفتار ملزمان میں محمد آصف عرف گجراتی ولد فضل کریم اور ندیم گجر ولد غلام محمدساکنائے گجرات شامل ہیں ۔ملزمان نے دوران انٹروگیشن انکشاف کیا کہ ان کا گروہ ضلع گوجرانوالہ کے مضافات تھانہ صدر گوجرانوالہ، پیپلز کالونی، کھیالی ،کوتوالی ، ضلع گجرات اور ضلع جہلم کے مختلف علاقہ جات سے سینکٹروں موٹر سائیکلیں چوری کرکے پشاور لے جا کر فروخت کر چکے ہیں۔دلچسپ بات یہ ہے کہ ملزم محمد آصف گجراتی ایم پی اے کا اُمیدوار سابقہ سیاستدان نکلا ہے ۔لیکن ایم پی اے اپنی جگہ دبنگ ڈی ایس پی سی آئی اے کا کہنا ہے کہخون جگر دیکرنکھاریں گے رُخ برگ گلاب۔ہم نے گلشن کے تحفظ کی قسم کھائی ہے۔اسی طرح ایک اور دلچسپ وقوعہ جس کو آپ سُن کو حیران ہو جائیں گے کہ گزشتہ روز ڈی اسی پی سی آئی اے عمران عباس کی زیر سرپرستی ایسا ڈکیت گینگ پکڑا گیا جس کا سرغنہ عبدالمنان الیکٹر یکل انجینئر ہے اور وہ بیرونِ ملک چائنہ سے ڈگری لیکر پاکستان آیا ہے جو غالباََ گوادر پورٹ پر بھی اپنے فرائض انجام دے چکا ہے۔اُس نے بتلایا کہ حال ہی میں اس نے دوسری شادی کی ہے اُس کی گاڑی کمپنی نے واپس لے لی تھی لہذا فوراََ گاڑی حاصل کرنے کے لیے اُس نے تین ارکان پر مشتمل تین رکنی ڈکیت گینگ بنایا جن میں عظیم ولد امین قوم مغل سکنہ کوہلووالہ اور عثمان ولد محمد جاوید قوم جٹ سکنہ کوٹ اسحاق گوجرانوالہ بھی شامل ہیں۔ اب گر عبدالمنان کی ڈگری دیکھیں تو کیا بات ہے مگر اُن اپنا دماغ اچھائی میں لگانے اور اپنا نام زندوں میں پیدا کرنے کی بجائے اُس کو شیطانی خواہشات پر لگا دیا اور جلد گاڑی اور روپے کو حاصل کرکے اپنی نئی نویلی دلہن کو راضی کرنے کے لیے شیطانی راہ اپنالی اور لوٹ مار شروع کر دی۔لیکن اُس کے ذہن میں یہ بات گھر نہ کر سکی کہ یہ گوجرانوالہ کی قابل اور ذہین پولیس ٹیم کے ہوتے ہوئے اپنے ناپاک ارادوں میں زیادہ دیر تک کامیاب نہ ہو سکے گا اور جب اس انجینئر صاحب نے جلیل ٹاون سے ہماری مسلمان بہنوں کو گن پوائنٹ پر روک کر گاڑی چھینی تو یہ معاملہ سٹی پولیس آفیسر ڈاکٹر معین مسعود تک جا پہنچا جنہوں نے دبنگ ڈی ایس پی سی آئی اے عمران عباس کو ملزمان کو جلد از جلد محدود ٹائم میں گرفتار کرنے کا ٹاسک ملا سی آئی اے پولیس نے افسر مجاز کے حکم کی بجاآوری کرتے ہوئے چالاک اور تیز ملزمان کو بروقت گرفتار کر لیا اور تمام معامہ کا ڈراپ سین ہو گیا اور ایک بار پھر سی آئی اے پولیس کے سر کامیابی کا سہرا سجا ۔ ہماری نیک تمنائیں اور دعائیں گوجرانوالہ پولیس کے لیے ہیں کہ اللہ پاک ان کے سینوں میں ہمشیہ ایمان سلامت رکھے اور کامیابیاں اُن کے قدم چومیں اور ہمارا ضلع گوجرانوالہ اور ملک پاکستان ہمیشہ شاد رہے آمین۔

About clicknewslive

Check Also

مقبوضہ کشمیر کی صورتحال پر پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس شروع

مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کرنے پر پاکستان کی جانب سے حکمتِ عملی پر …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

کلک نیوز سے واٹس ایپ پر رابطہ کریں