Home / اہم خبریں / کے الیکٹرک کے نرخوں میں 2.15 سے 3.37 روپے تک اضافہ، پیک اور آف پیک اوقات کا نظام بھی متعارف

کے الیکٹرک کے نرخوں میں 2.15 سے 3.37 روپے تک اضافہ، پیک اور آف پیک اوقات کا نظام بھی متعارف

کراچی( شہروز اسٹاف رپورٹر) کے الیکٹرک نے نرخ بڑھاکر ملک بھر کے برابر کردیے، قیمت میں 2.15سے3.37روپے تک اضافہ، پیک آور اور آف پیک اوقات کا نظام بھی متعارف، پیک آور میں بجلی مزید مہنگی ہوگی،کے الیکٹرک نےضلعی زرعی صارفین اور عارضی کنکشن کیلئے بھی نرخوں میں ردوبدل کردیا، کے الیکٹرک نے بجلی کے نرخوں میں اضافے کا اعلان کردیا، مہنگائی سے تنگ عوام کے لیے بجلی کےنرخوں میں اضافے سے مشکلات میں اضافہ ہو جائیگا، صارفین سے بینک چارجز اور میٹر رینٹ کی مد میںآئندہ کوئی علیحدہ رقم وصول نہیں کی جائے گی، کے الیکٹر ک صارفین کا ٹیرف اب پورے پاکستان کے مطابق کر دیاگیا ہے،5کلوواٹ اور اس سے زیادہ لوڈاستعمال کرنے والوں کیلئے پیک اور آف پیک اوقات کانظام بھی متعارف کرایا گیا ہے، کے الیکٹرک نے 300سے زائد اور 700تک یونٹ ماہانہ بجلی استعمال کرنے والے رہائشی صارفین کے نرخ 15.45 روپے سے بڑھا کر 17.60 روپے فی یونٹ اور 700 یونٹ سے زائد کے لیے قیمت ʼ17.33 سے بڑھا کر 20.70 روپے فی یونٹ کردی ہے، اس طرح دونوںکیٹیگری پر بالترتیب 2روپے 15پیسے اور تین روپے37پیسے کا اضافہ ہوگیا ہے ،کمرشل صارفین کے نرخ بھی بڑھائے گئے ہیں جس کے مطابق 5 کلوواٹ سے کم لوڈ پر 17.8 روپے سے بڑھ کر 18 روپے اور 5 کلوواٹ سے زائد لوڈ والے میٹر پر قیمت 15.03 روپے فی یونٹ سے بڑھا19.68 روپے فی یونٹ کردی گئی ہے، رہائشی صارفین جن کا منظورشدہ لوڈ 5 کلوواٹ اور اسے اوپر ہے پیک آورمیں جو کہ گرمیوں میں شام ساڑھے چھ بجے سے رات ساڑھے دس بجے تک اور سردیوں میں شام چھ سے دس بجے تک ہوں گے فی یونٹ 20.70روپے اور آف پیک آور میں 14.38 روپے یونٹ وصول کئے جائیں گےجبکہ کمرشل کے لیے پیک آور میں چارجز فی یونٹ 21.10 روپے اور آف پیک آور میں 15.63 روپے ہونگے،رہائشی سنگل فیز صارفین سے بجلی استعمال نہ کرنے کی صورت میں کم سے کم ماہانہ چارج 75روپے اور تھری فیز صارفین سے 150روپے کے حساب سے بل وصول ہوگا۔کے الیکٹرک نے ضلعی زرعی صارفین اور عارضی کنکشن کے لیے بھی نرخوں میں ردوبدل کیا ہے، کراچی میں مہنگائی سے تنگ عوام کے لیے بجلی کےنرخوں میں اضافے مشکلات میں اضافہ ہوجائے گاکیونکہ صارفین پہلے والے نرخوں سے تنگ تھے اب ان پر مزید بوجھ ڈال دیا گیا ہے۔دریں اثنا کے الیکٹرک کے جاری کردہ اعلامیے کے مطابق نیشنل الیکٹرک پاور ریگولیٹری اتھارٹی ) نیپرا( نے 22 مئی 2019 کو وزارت توانائی (پاور ڈویژن ) کی جانب سے جاری کردہ ایس آر او میں درج ٹیرف کی شرائط و ضوابط کے مطابق کے الیکٹرک کے صارفین کے لئے بجلی کے نرخوں میں اضافہ کا اعلان کر دیا ہے،نئے ٹیرف کا اطلاق بجلی کے بلوں کے اگلے مرحلہ سے ہو گا، بجلی کے نرخوں میں اضافہ پورے پاکستان میںصارفین سے یکساں نرخ وصول کرنے کی پالیسی کے مطابق کیا گیا ہے، ایسے تمام گھریلو صارفین جو ماہانہ 300 یونٹ تک بجلی استعمال کرتے ہیں، ان اضافی نرخوں سے مستثنیٰ رہیں گے۔

About clicknewslive

Check Also

: جمعیت علمائے اسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمن کے آزادی مارچ میں افغان طالبان کے جھنڈے لانے والے کارکنان کو گرفتار کر لیا گیا ہے

اسلام آباد کلک رپورٹر سے جمعیت علمائے اسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمن کے …

Leave a Reply

کلک نیوز سے واٹس ایپ پر رابطہ کریں